سکول ،کالج کے بچوں کے لئے ادبی مواد
بزم ادب

حضرت اقبال نے اپنی نظم ہی میں نہیں اپنی نثرمیں بھی عشقِ رسولﷺ پر بہت زور دیا ہے۔ آپ نے اپنی ایک تحریر میں فرمایا ۔عشقِ رسولﷺ دین بھی ہے اور وسیلہ دنیا بھی اسکے بغیر انسان نہ دین کا رہتا ہے اور نہ دنیا کا۔
حضرت اقبال نے عشقِ رسولﷺکو جو اسلام کی روح قرار دیا ہے یہ آواز انکے دل کی بھی تھی ،اور یہی فیصلہ انکے فلسفی دماغ کا بھی تھا آپنے اپنے ایک انگریزی خطبے میں فرمایا !’
پغمبر اسلام کی ذاتِ گرامی کی حیثیت دنیائے قدیم اور جدید کے درمیان ایک واسطہ ہے ۔بہ اعتبار اسکی روح کے دنیا ئے جدید سے یہ آپ کا ہی وجودِ اقدس ہے کہ زندگی پر علم و حکمت کے تازہ چشمے منکشف ہوئے جو اس کے آئندہ رخ کے مطابق تھے۔حضرت اقبال نے اپنے خطبات میں ایک مقام پر رسول اللہﷺ اور دین اسلام کے تعلق کو بہت ہی خوبصورت اور واضع الفاظ میں بیان فرمایا ہے !
’’اسلام بحیثیت دین خدا کی طرف سے ظاہر ہوا لیکن بحیثیت سوسائٹی کہ رسول کریمﷺ کی شخصیت اقدس کا مرہونِ منت ہے ۔

FacebookTwitterGoogle+Share

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *